دو ڈاکٹر…اچھا کون؟

یہ کہانی دو ڈاکٹروں کا قصہ ہے۔ آئیے دونوں ڈاکٹروں کی کہانی سنتے ہیں پھر باقی باتیں کریں گے۔

پہلا ڈاکٹر:

یہ ڈاکٹر مدثرفاروق نورانی ہیں۔ نہایت نیک انسان ہیں۔ پانچ وقت کے نمازی ہیں اور سات مرتبہ حج کر چکے ہیں۔ کئی عمرے بھی کر چکے ہیں۔ عمروں کی گنتی اب خود انہیں بھی یاد نہیں۔ جمعہ کی نماز پڑھنے کے لئے باقاعدہ شہر کی بڑی جامع مسجد میں جاتے ہیں۔ وہ ایک دور دراز قصبے میں واقع سرکاری ہسپتال کے انچارج ہیں۔ شام میں اپنا کلینک بھی چلاتے ہیں۔

پچھلے جمعہ کے دن وہ ہسپتال سے نکل ہی رہے تھے کہ ایک حادثے میں زخمی ہوجانے والے دو آدمی ہسپتال لائے گئے۔ ڈاکٹر صاحب نے جمعہ پڑھنے ضلع کی بڑی جامع مسجد جانا تھا جو ان کے ہسپتال سے لگ بھگ پچپن کلومیٹر دور تھی اور جامع مسجد پہنچنے کے لئے انہیں لگ بھگ ڈیڑھ گھنٹہ لگ جاتا تھا۔

ڈاکٹر صاحب مخمصے میں پھنس گئے، ایک طرف دوزخمی انسان تھے جن کی زندگی خطرے میں تھی تو دوسری طرف ان کی جمعہ کی نماز تھی۔ ڈاکٹر صاحب نے سوچا کے اللہ کی رضا سے زیادہ اہم تو کچھ بھی نہیں۔ یوں بھی زندگی اور موت تو اللہ کے ہاتھ میں ہے۔ جسے اللہ رکھے اُسے کون چکھے۔ سو ڈاکٹر صاحب جمعہ پڑھنے کے لئے روانہ ہو گئے۔ لگ بھگ پانچ گھنٹے بعد جب جمعہ پڑھ کر واپس آئے تو دو زخمیوں میں سے ایک کی موت واقع ہو چکی تھی جبکہ دوسرے کو اُس کے رشتہ دار شہر کے ہسپتال لے گئے تھے۔ خدا جانے وہ ہسپتال تک زندہ پہنچا ہو گا کہ نہیں۔

دوسرا ڈاکٹر:

یہ ڈاکٹر نواز حسین ہیں۔ ڈاکٹر صاحب نہایت نیک انسان ہیں۔ باقاعدگی سے نمازیں پڑھتے ہیں البتہ حج صرف ایک ہی کیا ہے۔ عمرے کرنے نہیں جاتے۔ کہتے ہیں کہ حج زندگی میں ایک بار فرض ہے بار بار کیوں جاؤں۔ اپنی ضرورت سے زیادہ کمائی غریب مریضوں کے مفت علاج اور دوائیوں پر خرچ کر دیتے ہیں۔ جمعہ کی نماز اپنے محلے ہی کی مسجد میں پڑھ کر فوری طور پر واپس ہسپتال پہنچ جاتے ہیں کیوں کہ دور دراز علاقوں سے مریض آکر ہسپتال میں ان کا انتظار کررہےہوتے ہیں۔

پچھلے جمعے کو محلے کی مسجد سے تکبیر کی آوازآرہی تھی۔ ڈاکٹر صاحب مسجد کی طرف بھاگنے ہی لگے تھے کہ کہ ایک زخمی نوجوان کو لوگ اُٹھا کر لے آئے۔ ڈاکٹر صاحب نے جمعہ کی نماز چھوڑ دی اور زخمی نوجوان کے علاج میں جُت گئے۔محلے کے تبلیغی حضرات کا خیال ہے کہ ڈاکٹر صاحب بہت بڑے گناہ کے مرتکب ہوئے ہیں۔ یعنی جمعہ کی نماز چھوڑ دینا تو تقریباً کفر کا مرتکب ہوجانا ہے۔

آپ کیا کہتے ہیں کون سا ڈاکٹر اچھا ہے؟

Advertisements

ایک خیال “دو ڈاکٹر…اچھا کون؟” پہ

جواب دیں

Please log in using one of these methods to post your comment:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s