اس ملک کے لوگوں نے جو بھی بھگتا ہے …کم ہے

آج کل یو ٹیوب کی ایک ویڈیو بہت گردش کر رہی ہے۔ لوگ فیس بک اور سماجی رابطے کی دیگر ویب سائٹوں پر اس ویڈیو پر بات کرہے ہیں۔ عامر لیاقت کو شیطان کہ رہے ہیں۔ اب اُس کی جعلی ڈگریوں پر بھی بحث دوبارہ چھڑ گئی ہے۔ اس ویڈیو میں عامر لیاقت حسین اپنے ساتھیوں کو گالیاں بکتا ہے۔ ایک موقع پر ایک خاتون فون پر سوال کر تی ہے کہ اگر کسی عورت کی عزت خطرے میں ہو تو کیا وہ خود کشی کر سکتی ہے۔ جواب دینے والا عالم کہتا ہے کہ یہ بہت "نازک” صورت حال ہے اور لفظ نازک پر "عالم” صاحب کی ہنسی چھوٹ جاتی ہے۔
اگرچہ عامر لیاقت کی گفتگو اور اندازواطوار سے پہلے دن ہی اندازہ ہو جاتا ہے کہ وہ ایک بہت بونگا سا بہروپیا ہے مگر کیا کیجئے ہماری عوام خاص طور پر خواتین کا جو اس "عالم” کی دیوانی تھیں۔ میں نے کوئی آٹھ برس پہلے کسی دوست سے لاہور میں کہا تھا کہ جس ملک میں "عالم آن لائن” سب سے مقبول پروگرام ہو اس ملک کے لوگوں کے ساتھ جو کچھ بھی ہو جائے کم ہے۔ اور ان آٹھ برسوں میں اس ملک کے لوگوں نے جو کچھ بھگتا ہے وہ کم ہی ہے۔

Advertisements

3 خیالات “اس ملک کے لوگوں نے جو بھی بھگتا ہے …کم ہے” پہ

  1. آپ کیسے کہہ سکتے ہیں کہ "عالم آن لائن” پاکستانیوں کا سب سے مقبول پروگرام تھا؟ یہ الگ بات کے مولوی شاہ رخ خان کی پسندیدگی کی اصل وجہ شاہ رخ خان کی پسندیدگی ہے- ویسے بھی عوام کوکیا پتا کہ مولوی صاحب پس_پردہ گالیوں کے اتنے شوقین ہیں- پردہ کے سامنے تو وہ اچھے یکٹر تھے نا!

  2. ہم لوگ خود بہت بڑے ڈھونگی ہیں- آج مولوی شاہ رخ خان کی گالیاں سن کر ہر کوئی سیخ پا ہوے جا رہا ہے، کون ہے جو ان گالیوں سے کسی بھی طرح واقف نہیں- کم سے کم "شیعہ کافر” اور اس طرح کی دیگر گالیوں سے کچھ کم ہی ہیں وہ گالیاں جو اس نام نہاد مولوی کی زبان پر تھیں! پھر ہمیں ان گالیوں پر اتنا تعجب کیوں؟

جواب دیں

Please log in using one of these methods to post your comment:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s